42

سیاسی مداخلت پر محکمہ زراعت کا احتجاج

مظفرآباد :ڈی جی زراعت مسٹر ڈاکٹرمحمد بشیر بٹ نے ڈپٹی ڈائریکٹر محترمہ آمنہ رفیع کی جانب سے راجہ مظہر قیوم کے خلاف درج ایف آئی آر کی سپورٹ کا اعلان کر دیا،ملاقاتیں اور رابطے کام نہ آئے احتجاج چوتھے روز میں داخل، ڈی جی زراعت  ڈی جی زراعت ھڑتالی ملازمین سے اظہار یکجہتی کے لئے احتجاجی کیمپ آپنہچے، ڈپٹی ڈائر یکٹر آمنہ رفیع کی جانب سے وزیر حکومت کے بیٹے راجہ مظہر قیوم کے خلاف ایف آئی اار کو سپورٹ کرنے

کا دبنگ اعلان، رولز آف بزنس  میں سرکاری افسران کے اختیارات میں مداخلت کی کوئی گنجائش نہیں ہے، کسی کو ملازمین یا افسران کی توہین کی اجازت نہی ں دی جا سکتی مسئلے کو با وقار انداز میں حل کیا جائے گا، کسی بھی سیاستدان کو  ملازمین کو دھمکانے کی اجازت نہیں دی جائے گی، ڈی جی ڈاکٹر بشیر بٹ کا احتجاجی کیمپ میں اظہار خیال،، ادھر تنظیم غیر جریدہ کی قیادت بھی اظہار یکجہتی کیلئے احتجاجی کیمپ آ پنہچی، غیر جریدہ قیادت کی طرف سے ہر قیمت پر افسران اور ملازمین کے تحفظ کی یقین دہانی کروائی گئی، غیر جریدہ قیادت میں مرکزی صدر سالک رشید عباسی، ضلعی صدر راجہ اویس، سعید مغل، شیخ خالد اور شکیل کاٹل  دفتری اوقات کے خاتمے تک کیمپ میں موجود رہے اس موقع پر تنظیم نے بتایا باثوق ذرائع کے مطابق ایف آئی آر میں نامزد راجہ مظہر قیوم نے گذشتہ روز ڈی جی زراعت سے ان کے دفتر میں ملاقات کر کے صلح صفائی کی سر سری کوشش کی تھی مگر ڈی جی کی کیمپ میں آمد اور جرات منداننہ گفتگو نے کیمپ کے حوصلے بلند کر دئے ہیں، تنظیم غیر جریدہ نے حڑتالیوں کو یقین دلایا کہ نہ تو قانونی تقرری منسوخ ہونے دی جائے گی اور نہ ہی با ضابطہ معافی نامہ کے بغیر کوئی کمپرومائز کیا جائے گا،آخری اطلاعات آنے تک احتجاج جاری رہے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

thanks for your feedback